قرآن مجید کی روشنی میں سخت حالات میں دو طبقات۔۔۔ موجودہ مشکل صورتحال میں ہم کس طبقے میں ہیں؟

Abu Dujana

Thread Starter
⭐⭐⭐⭐⭐⭐
Charismatic
Expert
Popular
Helping Hands
Joined
Apr 25, 2018
Local time
2:03 PM
Threads
81
Messages
963
Reaction score
1,360
Points
452
Location
Karachi, Pakistan
Gold Coins
513.88
السلام علیکم۔۔
عزیز ہم وطنوں!۔۔ وطن عزیز آج کورونا کے باعث۔۔ براہ راست اور بالراست۔۔ مشکل صورتحال سے دو چار ہے۔ مشکل حالات قوموں پر آتے ہیں۔۔ مگر قابل قدر ہوتے ہیں وہ لوگ۔۔ جو خوف، بے اطمینانی، بد دلی، ڈر، بزدلی اور مایوسی کو چھان کر۔۔۔صرف امید اور حوصلے کو آگے فارورڈ کرتے ہیں۔۔اور لوگوں کو مشکل حالات میں گھبرانے کی بجائے حوصلہ دیتے ہیں۔۔ راقم نے 2015 میں ایک کالم پڑھا تھا جس میں دو طبقوں کا تذکرہ تھا ۔۔جو مشکل حالات میں کیا رویہ رکھتے ہیں۔۔ سب سے پہلے اس کالم۔۔"رنگ و نور ۔۔۔سعدی کے قلم سے (شمارہ 470) " سے اقتباس پیش خدمت ہے۔۔ پھر میں اپنی بات۔۔آگے بڑھاتا ہوں۔۔


٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭
دو طبقے
قرآن مجید میں ’’جہاد‘‘ کو پڑھ لیجیے…ماضی کے جہادی واقعات پر نظر ڈال لیجیے آپ کو اسلامی لشکر میں دو طبقے ضرور نظر آئیں گے…

(۱) مُثَبِّتِینْ
(۲) مُثَبِّطِینْ

دوسرے لفظ کا مطلب پہلے سمجھ لیجئے … ’’مثبطین‘‘ وہ لوگ جو مایوسی پھیلاتے ہیں… جذبوں کو سرد کرتے ہیں…خود بھی بھاگتے ہیں اور دوسروں کو بھی بھگاتے ہیں…ان کو ’’مخذلین‘‘ بھی کہا جاتا ہے…بزدلی،مایوسی ،بددلی،بد اطمینانی پھیلانے والے…مسلمانوں کو رسوائی اور شکست کے راستے پر ڈالنے والے … جمے ہوئے قدموں اور دلوں کو اُکھاڑنے والے …دراصل ’’جہاد‘‘ بہت اونچے مقام والی عبادت ہے…یہ اسلام کا اہم فریضہ ہے…یہ اللہ تعالیٰ کے قرب کا بہترین وسیلہ ہے…یہ تمام اعمال سے افضل عمل ہے…یہ مسلمانوں کو عزت اور غلبہ دلانے والا عمل ہے…یہ اسلام کو قوت اور غلبہ دلانے والا عمل ہے…یہ گناہوں کو مٹا کر جنت میں جلد لے جانے والا عمل ہے…جب کوئی مسلمان اس عمل میں لگ جاتا ہے تو شیطان…اس مسلمان کا نام اپنے دشمنوں کی سب سے اہم فہرست میں لکھ دیتا ہے…ایسے آدمی کو گمراہ کرنے کے لئے شیطان اپنے خاص اور ماہر شاگردوں کو متعین کرتا ہے…اور چھ طرف سے اس مجاہد پر حملہ آور ہوتا ہے…وہ جہادی لشکروں اور جماعتوں میں … ایسے افراد چھوڑ دیتا ہے جو ہر وقت مایوسی،بد دلی اور پریشانی پھیلاتے رہتے ہیں…بے اطمینانی جب کسی دل میں آ جاتی ہے تو پھر…ایسے دل کا جہاد پر جمے رہنا بہت مشکل ہو جاتا ہے کیونکہ … جہاد تو اللہ تعالیٰ کو دل دینے،جان دینے،مال دینے … اور سب کچھ دینے کا نام ہے…ایک بے اطمینان شخص کس طرح سے قربانی دے سکتا ہے؟…آپ غزوہ احد سے شروع ہو جائیں اور آج کے ’’شرعی جہاد‘‘ تک کی تاریخ پڑھ لیں…ہر اسلامی لشکر کے ساتھ مثبطین اور مخذلین کا یہ ٹولہ ساتھ ساتھ بندھا نظر آتا ہے…غزوۂ احد میں یہ ٹولہ بڑی تعداد میں مسلمانوں کے ساتھ نکلا…پھر راستے میں تین سو افراد رُوٹھ کر ٹوٹ کر بھاگ گئے…آپ خود سوچیں کہ جب کسی لشکر کا پورا ایک تہائی حصہ ٹوٹ جائے تو…اس سے کس قدر مایوسی پھیلتی ہے…آج کل کے دور میں تو ایسا ایک جھٹکا کسی بھی جماعت یا لشکر کو مکمل ختم کرنے کے لئے کافی ہے…مگر وہ لشکر بڑا عظیم تھا… انہوں نے ان تین سو کی طرف دیکھنا بھی گوارہ نہ کیا…ہمارا بھاگنے والوں سے کیا تعلق؟ہم نے اپنا ہاتھ حضرت آقا مدنی ﷺ کے ہاتھ مبارک میں دیا ہے…وہ جب لشکر میں موجود تو پھر ہمارے بھاگنے کا کیا جواز؟…تین سو ’’مخذلین‘‘ بھاگ گئے…مگر چند ایک اسلامی لشکر میں موجود رہے کہ آگے چل کر جب لڑائی شروع ہو گی تو اس وقت مایوسی اور بد دلی پھیلائیں گے…انہوں نے اپنا کام آگے چل کر کیا …آپ نے واقعہ اُحد میں پڑھا ہو گا…مگر الحمد للہ ان کی بھی ایک نہ چلی…یہ تو ہوئی مثبطین کے لفظ کی تشریح…اب دوسرے لفظ کا مطلب سمجھیں…

’’مثبتین‘‘…یہ وہ اللہ کے بندے ہوتے ہیں…جو اسلامی لشکر کو ہمیشہ ثابت قدمی کی طرف بلاتے رہتے ہیں…وہ خود بھی ڈٹے رہتے ہیں…اور اپنے قول اور عمل سے دوسروں کو بھی ڈٹا رہنے کی ہر وقت دعوت دیتے رہتے ہیں… دوسرے الفاظ میں ان کو ’’مُحَرِّضِینْ‘‘ بھی کہتے ہیں…اصل مثبت یعنی ثابت قدمی عطا فرمانے والا اللہ تعالیٰ ہے چنانچہ اللہ تعالیٰ کے یہ مخلص بندے اللہ تعالیٰ کے مُنادی ہوتے ہیں … یہ وہ جنتی پھول ہوتے ہیں…جن کا ایمان کبھی نہیں مرجھاتا…یہ لشکروں کو جوڑتے ہیں…ان کا رخ سیدھا رکھتے ہیں…اور عین جنگ اور آزمائش کے وقت یہ ثابت قدمی کی آوازیں لگا کر…مایوسی اور شکست کو دور بھگاتے ہیں…ہم نے اپنی زندگی میں ایسے بعض افراد دیکھے ہیں…سبحان اللہ! نور ان کے چہروں سے برستا ہے،اخلاص کی خوشبو ان کی آنکھوں سے ٹپکتی ہے…یہ اللہ تعالیٰ کے دیوانے بندے ہر لشکر اور ہر سچی جماعت کی جان ہوتے ہیں…افغانستان میں جب امارت اسلامیہ کا سقوط ہو رہا تھا…ہر طرف غم تھا اور خون…تب ایک مجلس میں ایک ایسا دیوانہ دیکھا…وہ کھانے کے دوران بلند آواز سے قرآنی آیات پڑھتا، ثابت قدمی کے فضائل سناتا…اور وفاداری کے گیت گاتا…اس کی مجلس میں ایک منٹ کے لئے بھی…دل میں یہ خیال نہ گذرا کہ مسلمانوں پر اتنا بڑا ظلم ہو گیا ہے…اور ہمیں بظاہر ایک بڑی شکست ہوئی ہے…وہاں تو جتنی دیر موجود رہے دل…عرش کے نیچے شکر کے سجدے کرتا رہا کہ…ایمان والوں کی فتح … ایمان کی سلامتی میں ہے…آزمائش اللہ تعالیٰ کے پیارے بندوں پر آتی ہے…اللہ تعالیٰ راضی تو مسلمان کی جیت…اللہ تعالیٰ ناراض تو مسلمانوں کی شکست…حالات کی خرابی سے منافق…اپنا نظریہ بدلتا ہے…مسلمان تو آزمائش کی آگ میں کود کر پکا مومن بن کر نکلتا ہے …دنیا میں نفع،نقصان اور رات دن کے آنے جانے کا سلسلہ جاری رہتا ہے…بس اللہ تعالیٰ کے ساتھ وفادار رہو…اس کے دشمنوں کا ڈٹ کر مقابلہ کرو…اور اللہ تعالیٰ کے دشمنوں کو اپنی پیٹھ اور بزدلی نہ دکھاؤ…

ماضی کے قصوں میں ہم یہی پڑھتے ہیں کہ …بعض پورے پورے لشکروں کو ایک بوڑھے شخص نے…ثابت قدمی کی آواز لگا کر مایوسی سے بچا لیا…اور بعض شکست کھاتے لشکروں کو …کسی چھوٹے سے بچے نے بلند آواز سے چند قرآنی آیات سنا کر…فتح کے راستے پر ڈال دیا…
٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔٭

درج بالا اقتباس سے بخوبی یہ اندازہ لگایا جاسکتا ہے۔۔کہ سخت سے سخت حالت میں بھی۔۔ لوگوں کو حوصلے دینے والے لوگ۔۔اللہ تعالیٰ کو محبوب ہوتے ہیں۔۔ اور لوگوں میں ڈر اور بے چینی، وہم، بد دلی، بے اطمینانی پیدا کرنے والے لوگوں کی اللہ تعالیٰ نے مذمت فرمائی ہے۔۔۔
اب موجودہ ۔۔کورونا۔۔کی صورتحال پر۔۔ مختلف قسم کی شیئرنگ آئے روز ہورہی ہے۔۔۔ ہم کس قسم کی شیئرنگ آگے فارورڈ کرتے ہیں۔۔ کیا ہماری شیئرنگ ۔۔ مثبتین والی ہے۔۔یا۔۔ مثبطین والی۔۔۔
کیا ہماری شیئرنگ سے لوگوں کو۔۔ حوصلہ ملتا ہے۔۔یا لوگوں میں بے چینی، ڈر، خوف، اور بد اطمینانی پھیلتی ہے۔۔
ہم کس طبقے میں ہیں۔۔۔یہ فیصلہ ہمیں خود کرنا ہوگا۔۔۔
۔
اتنا یاد رکھیں۔۔کہ۔۔
ایمان مفصل
میں ہم ہر اچھی اور بری تقدیر من جانب اللہ ۔۔پر ایمان لانے کا اقرار کرتے ہیں۔۔ ملاحظہ ہو۔

اٰمَنتُ بِاللّٰہِ وَ مَلئِکَتِہِ وَ کُتُبِہِ وَ رَسُلِہِ وَ لیَومِ الاٰخِرِ وَ القَدِر خَیرِہِ وَ شَرِّہِ مِنَ اللّٰہِ تَعَالیٰ وَالبَعثِ بَعدَالمَوتِ
" میں اللّٰہ تعالیٰ پر اور اس کے فرشتوں اور اس کی کتابوں اور اس کے رسولوں اور قیامت کے دن پر اور اس پر کہ اچھی اور بری تقدیر اللّٰہ تعالیٰ کی طرف سے ہوتی ہے اور موت کے بعد اٹھائے جانے پر ایمان لایا "

اور یہ بھی یاد رکھیں کہ۔۔
موت اللہ تعالیٰ کا اٹل قانون ہے۔۔ہر ذی روح نے موت کا ذائقہ چھکنا ہے۔۔ اور موت کا ایک وقت مقرر ہے۔۔اور اللہ تعالیٰ کا دو ٹوک اعلان ہے۔۔

فَإِذَا جَاء أَجَلُهُمْ لاَ يَسْتَأْخِرُونَ سَاعَةً وَلاَ يَسْتَقْدِمُونَ
جب موت آتی ہے۔۔تو ایک لمحہ نہ پہلے آتی ہے اور نہ ہی ایک لمحہ بعد میں۔۔۔
۔
۔
تو۔۔ جب تکلیف اور راحت من جانب اللہ ہے۔۔اور۔۔ موت کا ایک وقت مقرر ہے۔۔تو۔۔پھر۔۔ کورونا۔۔۔ کا ڈر کیسا؟۔۔ اور کورونا سے عام لوگوں کو ڈرانا کیسا۔۔
۔
احتیاط اور تدبیر کی اہمیت اپنی جگہ ہے۔۔ اس کا درس بھی اسلام ہمیں دیتا ہے۔۔ اس کا دامن تھامے رہنا چاہیے۔۔مگر۔۔ حوصلہ نہیں ہارنا چاہیے۔۔اور۔۔ نا امیدی کی باتیں نہیں کرنی چاہیے۔۔
۔
اللہ تعالیٰ ہمیں مثبتین۔یعنی۔۔ مشکل صورتحال میں۔۔۔ لوگوں کو حوصلہ دینے والوں میں سے بنائے۔۔آمین۔۔
فقط ابو دُجانہ۔۔
 

Doctor

⭐⭐⭐⭐⭐⭐
Charismatic
Designer
Expert
Writer
Popular
King of Alkamunia
ITD Supporter 🏆
Proud Pakistani
الکمونیا میں تو ایسا نہیں ہوتا
ITD Developer
Top Poster
Top Poster Of Month
Joined
Apr 25, 2018
Local time
2:03 PM
Threads
840
Messages
12,057
Reaction score
14,096
Points
1,801
Age
47
Location
Rawalpindi
Gold Coins
3,346.17
Get Unlimited Tags / Banners
Permanently Change Username Color & Style.
Get Unlimited Tags / Banners
Get Unlimited Tags / Banners
Thread Highlight Unlimited
Change Username Style.

faizyG

Champion
Designer
Emerging
Poet شاعر
Joined
May 18, 2019
Local time
2:03 PM
Threads
16
Messages
336
Reaction score
320
Points
253
Gold Coins
629.86
ما شاء اللہ۔ بہت خوبصورت حوصلہ اور ایمان مضبوط کرنے والی باتیں کیں ہیں۔ اللہ کریم مشکل کی اس گھڑی میں پوری امت مسلمہ کو یک جان ہو کر ہمت اور صبر کے ساتھ ڈٹ جانے کی توفیق عطا فرمائے۔ اور اس مشیت الٰہی جانتے ہوئے مثبت سوچ کے ساتھ اس آزمائش میں پورا اترنے کے لئے استقامت نصیب فرمائے۔ ہم سب کو ملکر اس کی بلند بارگاہ میں اپنے کئے ہوئے تمام گناہوں ، بداعمالیوں ،غفلتوں، اور شیطانی وسواس میں مبتلا ہوکر اپنا نقصان کرنے پر توبہ و استغفار کرنے اور معافی مانگنے کے ساتھ ساتھ خود کو اس کے دین کے تابع کرنے کا عزم و ارادہ اور اس پر عمل پیرا ہونا ہے۔اللہ کریم ہم سب کو ایسا مسلمان بنائے جیسا اللہ اور اس کا پیارا حبیبﷺﷺﷺ چاہتے ہیںَ جس کی تعلیم تاعمر ہمارے پیارے آقا و مولا ﷺﷺﷺ دیتے رہے۔آمین یا رب العالمین۔
 

Abu Dujana

Thread Starter
⭐⭐⭐⭐⭐⭐
Charismatic
Expert
Popular
Helping Hands
Joined
Apr 25, 2018
Local time
2:03 PM
Threads
81
Messages
963
Reaction score
1,360
Points
452
Location
Karachi, Pakistan
Gold Coins
513.88
ما شاء اللہ۔ بہت خوبصورت حوصلہ اور ایمان مضبوط کرنے والی باتیں کیں ہیں۔ اللہ کریم مشکل کی اس گھڑی میں پوری امت مسلمہ کو یک جان ہو کر ہمت اور صبر کے ساتھ ڈٹ جانے کی توفیق عطا فرمائے۔ اور اس مشیت الٰہی جانتے ہوئے مثبت سوچ کے ساتھ اس آزمائش میں پورا اترنے کے لئے استقامت نصیب فرمائے۔ ہم سب کو ملکر اس کی بلند بارگاہ میں اپنے کئے ہوئے تمام گناہوں ، بداعمالیوں ،غفلتوں، اور شیطانی وسواس میں مبتلا ہوکر اپنا نقصان کرنے پر توبہ و استغفار کرنے اور معافی مانگنے کے ساتھ ساتھ خود کو اس کے دین کے تابع کرنے کا عزم و ارادہ اور اس پر عمل پیرا ہونا ہے۔اللہ کریم ہم سب کو ایسا مسلمان بنائے جیسا اللہ اور اس کا پیارا حبیبﷺﷺﷺ چاہتے ہیںَ جس کی تعلیم تاعمر ہمارے پیارے آقا و مولا ﷺﷺﷺ دیتے رہے۔آمین یا رب العالمین۔
آمین۔۔ثم آمین
جزاک اللہ۔۔
 
Top
AdBlock Detected

We get it, advertisements are annoying!

Sure, ad-blocking software does a great job at blocking ads, but it also blocks useful features of our website. For the best site experience please disable your AdBlocker.

I've Disabled AdBlock    No Thanks