ہم سب خلیل ہیں

Lovely Eyes

Thread Starter
Staff member
★★★★★★
Charismatic
Expert
Writer
Popular
Verified
Emerging
Fantabulous
The Iron Lady
Most Reactions 179
Joined
Apr 28, 2018
Messages
860
Reaction score
1,685
Points
848
Gold Coins
0.03
Silver Coins
102
Diamonds
0.00200
Permanently Change Username Color & Style.
Get Unlimited Tags / Banners
Get Unlimited Tags / Banners
آپ حقائق کو جھٹلا سکتے ہیں مگر تاریخ کو جھٹلانا ممکن نہیں۔ اور یہ تاریخ پر نقش ہے کہ کیسے اسلام نے ظہور کے بعد عرب کے معاشرے میں خواتین کو عزت دی اور حقوق بھی دیے۔
4681
اس سادہ سی بات کو ایسے سمجھا جاسکتا ہے کہ عرب معاشرے میں محبوبہ سے علی الاعلان پیار کا اظہار کرنا تو بہادری سمجھا جاتا تھا (اسی خاطر عرب شاعری محبوبہ سے پیار کے اظہار سے بھری ہوئی ہے) مگر بیوی سے اظہار محبت عیب تھا۔ ایک مرتبہ حضور اکرمؐ سے حضرت عمرو بن العاص رضی اللہ عنہ نے دریافت کیا کہ آپ کو دنیا میں سب سے زیادہ محبت کس سے ہے؟ آپؐ نے فرمایا ’’عائشہ رضی اللہ عنہا سے‘‘۔ یہ سن کر صحابہ کرام رضوان اللہ علیہم اجمعین چونک گئے کہ عرب معاشرے کو جانتے ہوئے بھی آپؐ نے اتنا واضح جواب کیسے دے دیا۔ جس کے باعث حضرت عمروؓ نے دوبارہ استفسار کیا ’’یارسول اللہؐ ہمارا مطلب تھا کہ مردوں میں؟‘‘ آپؐ نے فرمایا ’’عائشہ کے والد (حضرت ابوبکر صدیق رضی اللہ عنہ) سے‘‘۔ (بخاری شریف)

ایک اور جگہ حضرت عائشہ صدیقہ رضی اللہ تعالیٰ عنہا سے روایت ہے کہ حضور اکرمؐ نے فرمایا کہ مسلمانوں میں کامل ایمان والا وہ ہے جس کا اخلاقی برتاؤ (سب کے ساتھ، اور خاص طور پر) بیوی کے ساتھ جس کا رویہ لطف و محبت کا ہو۔ (المستدرک، کتاب الایمان: حدیث 173)
مجھے یقین ہے کہ اگر ہم یہ احادیث فریم کروا کر اپنے گھر کی دیواروں پر آویزاں کردیں تو عورت و مرد کی بحث کے آدھے مسائل یہیں حل ہوجائیں گے۔ ماضی میں یقیناً ہمارے معاشرے میں عورت اور مرد کے درمیان ایک خلیج قائم تھی، جس کے بہت سے محرکات تھے۔ مگر وقت کے ساتھ تعلیم اور میڈیا نے ہمارے معاشرے کی اس خلیج کو کافی حد تک پُر کردیا ہے۔ آج کی عورت کو معاشرے میں ان مسائل کا سامنا نہیں رہا جو ماضی میں خواتین کو ہوتا تھا۔

خواتین کے عالمی دن پر پچھلے سال بھی ’’عورت مارچ‘‘ کے نام سے ریلی کا انعقاد کیا گیا، جہاں اخلاق باختہ نعروں کی گونج نے پورے ملک میں بےچینی کی کیفیت پھیلادی۔ اس بار بھی کچھ دنوں سے ’’عورت مارچ‘‘ پر تکرار مختلف ٹی وی چینلز پر جاری تھی، جس میں ہماری قوم دوبارہ تماشائی بن کر دو گروہوں میں تقسیم ہوچکی تھی۔ لیکن اب اس جنگ میں شدت اس دوران آئی جب ڈرامہ نویس خلیل الرحمٰن قمر اور تجزیہ کار ماروی سرمد کے درمیان سخت الفاظ کا تبادلہ ہوا۔ یہ پہلی بار نہیں تھا کہ ماروی سرمد یا خلیل الرحمٰن قمر کا کسی میڈیا پرسن کے ساتھ تلخ جملوں کا تبادلہ ہوا ہو۔ اس سے پہلے بھی یہ دونوں حضرات کئی میڈیا پرسنز اور سیاستدانوں پر اخلاق باختہ جملے کس چکے ہیں۔ اس ساری صورتحال میں عام آدمی پریشان ہے اور سوچ رہا ہے کہ ہم من حیث القوم کیا پہلے ہی کم مسائل کا شکار تھے جن میں عورت مارچ نامی بیماری کا بھی اضافہ ہوچکا ہے۔

ہمیں مل کر اپنی ترجیحات طے کرنا ہوں گی کہ ہم اپنے معاشرے کو کس جانب لے کر جارہے ہیں؟ ہم معاشرہ ہیں یا کوئی ریوڑ، جسے جب چاہے کوئی ماروی سرمد یا خلیل الرحمٰن ہانک کر ایک جانب لے جائے؟ ہم کتنے دلچسپ لوگ ہیں کہ دو افراد کی لڑائی کو صنفی لڑائی بنا کر اپنے معاشرے کی چولیں ہلانا چاہ رہے ہیں۔ پورا دن اپنی ماں، بیوی، بیٹی اور بہن کےلیے کمانے اور ہر ایک سے گالیاں کھانے والے مردک و ظلم کا استعارہ ثابت کرکے ہم معاشرے کو کس ڈگر پر لے کر جارہے ہیں۔ میں کھلے دل سے تسلیم کرتا ہوں کہ کئی جگہوں پر مرد عورتوں پر مظالم کی وجہ بھی ہوں گے، اور یقیناً معاشرے میں عورتوں کےلیے بہت سے نئے مسائل بھی جنم لے رہے ہیں، لیکن ایک ہی لاٹھی سے پورے ریوڑ کو ہانک دینا کہاں کا انصاف ہے؟ ہمیں سمجھنا چاہیے کہ چوری کے ڈر سے اپنی گاڑی کو تالا لگانے والا خود چور نہیں ہوتا۔ ہمارا معاشرہ گنے چنے مردوں کی درندگی کی وجہ سے اخلاق باختہ اور مذہب مخالف نعروں کا متحمل نہیں ہوسکتا۔

یہ کہاں کی انسانیت ہے کہ ایک گھریلو یا ورکنگ خاتون کا نام جوڑ کر (جس کا اس مارچ سے دور دور تک کوئی لینا دینا نہیں) اپنے فرسودہ نظریات کا پرچار کیا جائے۔ معاشروں میں پِسی عورت کو ایسے مارچ کی نہیں بلکہ قانونی اور سماجی امداد کی ضرورت ہے۔ یہاں ’’عورت مارچ‘‘ کے منتظمین سے قوم یہ پوچھنے میں حق بجانب ہے کہ اگر وہ مغربی معاشرے کی پیروی کرتے ہوئے عورتوں کے حقوق کےلیے مارچ کرنا چاہتے ہیں تو یہ ان کا جمہوری حق ہے، جس سے کسی کو اختلاف ممکن نہیں۔ مگر کیا انہوں نے یہ مارچ نکالنے سے قبل ہوم ورک مکمل کیا؟ کیا انہوں نے پسماندہ علاقوں میں پِسنے والی عورتوں کےلیے قانونی جنگ لڑی؟ انہوں نے وڈیروں کے ظلم سہنے والی کتنی عورتوں کی امداد کی؟ زینب جتنی کتنی بچیوں کے کیس میں قانونی مدد فراہم کی؟ کتنی غریب خواتین کو انہوں نے مفت کورسز کروا کر ہنرمند بنایا اور اپنے پاؤں پر کھڑا کیا؟ مغرب کی نقالی کرنی ہے تو پھر مکمل کی جائے۔ یہ ’آدھا تیتر آدھا بٹیر‘ والی پالیسی معاشرے کو انتشار میں دھکیلنے کے سوا کچھ نہیں۔

اگر آپ نے پچھلے ایک سال میں یہ سب ہوم ورک کیا ہوتا تو یقیناً آپ کے اس مارچ کو عوامی حمایت حاصل ہوتی۔ ہم کتنے عجیب لوگ ہیں کہ جدید معاشروں کی نقالی بھی ٹھیک طرح نہیں کرپاتے۔ لبرل بن کر ملا ازم کو تو للکارتے ہیں، مگر عملی اقدامات سے کتراتے دکھائی دیتے ہیں۔ کسی نے ٹھیک ہی کہا کہ ہم ایسی قوم ہیں جو 21 ویں صدی کےلیے ذہنی طور پر تیار نہیں تھے، مگر ہمیں گھسیٹ کر اکیسویں صدی میں داخل کروا دیا گیا ہے۔ اب نہ ہم اکیسویں صدی کے رہے ہیں اور نہ بیسویں صدی کے۔ ہم ایک دن عورت کے نام کردینے اور اچھے خاصے سنجیدہ موضوعات کو متنازع بنا دینے سے سمجھتے ہیں کہ پاکستان میں عورت کے مسائل حل ہوگئے۔ ہماری سنجیدگی کا عالم یہ ہے کہ یہ جانتے ہوئے بھی کہ پاکستان جیسے ملک میں مذہب پر بات کرنا انتہائی نازک مسئلہ ہے، اس کے باوجود عورت سے ’’میرا جسم میری مرضی‘‘ جیسا متنازع نعرہ جڑوانا چاہتے ہیں۔

پچھلے چند دنوں سے جاری اس سارے معاملے سے ہمارے لبرل طبقے کو سبق سیکھنے کی اشد ضرورت ہے۔ وگرنہ ہمارے معاشرے میں ہر ایک کو ’’ہم سب خلیل ہیں‘‘ کہتے دیر نہیں لگنی۔
تحریر : محمد شاہ زیب صدیقی
 

ناعمہ وقار

Staff member
★★★★★★
Charismatic
Champion
Writer
Popular
Verified
Mysterious
Joined
May 8, 2018
Messages
2,968
Reaction score
4,260
Points
1,073
Location
اسلام آباد - پاکستان
Gold Coins
0.00
Silver Coins
9
Diamonds
0.04690
Permanently Change Username Color & Style.
Get Unlimited Tags / Banners
Single Thread Highlight for 1 Week.
Thread Highlight Unlimited
Change Username Style.
بہت عمدہ اشتراک
 

Silent Rose

Staff member
★★★★★★
Designer
Verified
Emerging
Hypersonic
Respectable
Courageous
Most Reactions 521
Most Posts 286
Joined
Sep 23, 2019
Messages
1,746
Reaction score
2,840
Points
790
Age
48
Location
کراچی
Gold Coins
0.00
Silver Coins
17,600
Diamonds
0.06600
Get Unlimited Tags / Banners
Get Unlimited Tags / Banners
بہت اچھی تحریر
بات وہی ہے کہ کوئی بُرا نہیں ہے نہ مرد نہ عورت
بُرا تب بنتے ہیں جب اسلام کے حدود سے باہر ہو جائیں اور مخالف چلیں
اللہ سب کو ہدایت دے۔۔ آمین
سب لاعلمی کا نتیجہ ہے
 

ناعمہ وقار

Staff member
★★★★★★
Charismatic
Champion
Writer
Popular
Verified
Mysterious
Joined
May 8, 2018
Messages
2,968
Reaction score
4,260
Points
1,073
Location
اسلام آباد - پاکستان
Gold Coins
0.00
Silver Coins
9
Diamonds
0.04690
Permanently Change Username Color & Style.
Get Unlimited Tags / Banners
Single Thread Highlight for 1 Week.
Thread Highlight Unlimited
Change Username Style.
بہت اچھی تحریر
بات وہی ہے کہ کوئی بُرا نہیں ہے نہ مرد نہ عورت
بُرا تب بنتے ہیں جب اسلام کے حدود سے باہر ہو جائیں اور مخالف چلیں
اللہ سب کو ہدایت دے۔۔ آمین
سب لاعلمی کا نتیجہ ہے
بالکل درست فرمایا
ہمارا تو دین ہی مکمل ضابطہ حیات ہے
جتنی عزت و احترام اسلام میں عورت کو حاصل ہے کسی اور مذہب میں نہیں ہے، پھر اس قسم کے مارچ کی بھلا ہمیں ضرورت ہی کیا ہے
یہ سب کفار کی سوچی سمجھی سازش ہے جسے ہمارے معاشرے پہ مسلط کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے ، اللہ ہمیں ہدایت دے، آمین
 

Silent Rose

Staff member
★★★★★★
Designer
Verified
Emerging
Hypersonic
Respectable
Courageous
Most Reactions 521
Most Posts 286
Joined
Sep 23, 2019
Messages
1,746
Reaction score
2,840
Points
790
Age
48
Location
کراچی
Gold Coins
0.00
Silver Coins
17,600
Diamonds
0.06600
Get Unlimited Tags / Banners
Get Unlimited Tags / Banners
بالکل درست فرمایا
ہمارا تو دین ہی مکمل ضابطہ حیات ہے
جتنی عزت و احترام اسلام میں عورت کو حاصل ہے کسی اور مذہب میں نہیں ہے، پھر اس قسم کے مارچ کی بھلا ہمیں ضرورت ہی کیا ہے
یہ سب کفار کی سوچی سمجھی سازش ہے جسے ہمارے معاشرے پہ مسلط کرنے کی کوشش کی جا رہی ہے ، اللہ ہمیں ہدایت دے، آمین
جی بالکل درست فرمایا آپ نے۔۔
اللہ سے دعا کرنی چاہیئے کہ سار ی قوم کو عقل آجائے​
 

Syed Waqas

Staff member
★★★★★★
Charismatic
Designer
Writer
Popular
Verified
Lazy but Talented
Do the Impossible
Be Different
Captain of My Soul
Joined
May 6, 2018
Messages
2,154
Reaction score
3,108
Points
1,044
Location
Karachi
Gold Coins
2.75
Silver Coins
228
Diamonds
0.00121
Get Unlimited Tags / Banners
Get Unlimited Tags / Banners
Get Unlimited Tags / Banners
Get Unlimited Tags / Banners
Permanently Change Username Color & Style.
Single Thread Highlight for 1 Week.
Change Username Style.
اللہ پاک ہمیں اور ہماری خواتین کو ان خرافات سے بچائے اور جو آزادی عورتوں کو اسلام نے دی ہے اس پر شکر ادا کرنے کی توفیق عطا فرمائے اور جو نام نہاد خواتین اخلاق باختہ نعروں پر مبنی عورت مارچ کاحصہ ہیں انہیں ہدایت نصیب فرمائے آمین
 

Silent Rose

Staff member
★★★★★★
Designer
Verified
Emerging
Hypersonic
Respectable
Courageous
Most Reactions 521
Most Posts 286
Joined
Sep 23, 2019
Messages
1,746
Reaction score
2,840
Points
790
Age
48
Location
کراچی
Gold Coins
0.00
Silver Coins
17,600
Diamonds
0.06600
Get Unlimited Tags / Banners
Get Unlimited Tags / Banners
اللہ پاک ہمیں اور ہماری خواتین کو ان خرافات سے بچائے اور جو آزادی عورتوں کو اسلام نے دی ہے اس پر شکر ادا کرنے کی توفیق عطا فرمائے اور جو نام نہاد خواتین اخلاق باختہ نعروں پر مبنی عورت مارچ کاحصہ ہیں انہیں ہدایت نصیب فرمائے آمین
ثم آمین​
 
Top
AdBlock Detected

We get it, advertisements are annoying!

Sure, ad-blocking software does a great job at blocking ads, but it also blocks useful features of our website. For the best site experience please disable your AdBlocker.

I've Disabled AdBlock
No Thanks